Friday, May 7, 2010

آسٹریلیا میں خیمہ زنی - تکہ پارٹی-6


مرغ تکہ کی تیاری میں انس شاہین صاحب پیش پیش تھے، وہ سڈنی سے ہی فراز خان کے ساتھ تمام بندوبست کر کے چلے تھے. جس دوران تکوں کی تیاری کی جا رہی تھی اس دوران ہم میں سے چند لوگ ٹیبل ٹینس سے شغل فرما رہے تھے جو کہ وہاں واقع اسپورٹس روم میں کھیلی جا رہی تھی اور ان میں ہم بھی شامل تھے. تکوں کی طرف دوبارہ لوٹے تو پتہ چلا کہ یہ آسٹریلیا کے کوئلے ہیں کہ آگ ہی نہیں پکڑتے حالانکہ انکو جلانے کیلیے اسٹارٹر کا بندوبست بھی کیا گیا تھا. مگر یہ کوئلے کسی ایسے مردہ درخت کی باقیات معلوم ہوتے تھے کہ جن کی شاخوں پر کسی پرندے نے آشیانہ نہ بنایا ہو کہ بڑی مشکل سے جلے، اس پر ایک پرانہ پنجابی گیت یاد آگیا جس کے بول کچھ یوں تھے کہ
ع رںاں والیاں دے پکن پراٹھے تے چھڑیاں دی اگ نہ بلھے
ان کوئلوں کو ایک عدد تکوں کیلیے مخصوص کروی چولہے میں دہکایا گیا، جس میں جالی رکھی جانا تھی اور اس پر تکہ سجا کر بھونے جانا تھے.
خیر اسی دوران فراز علی نے بھی الگ سے لکڑیاں اکھٹا کر کے پتھروں کا چولہا بنا کر آگ جلا ڈالی اور اس پر تکہ لگانا شروع کر دیا. ادھر انگریزی انداز کا تکہ بھی بننا شروع ہو گیا. واڈی والا کے پاس منفرد اور اچھوتا خیال تھا اس نے چولہے میں آلو ڈال دئے جو کہ المونیم کے ورق میں لپٹے ہوے تھے. جب یہ آلو بهن کر تیار ہوے تو ان میں سوراخ کر کے پنیر بھر کر کھایا، نہایت ہی لزیز لگے. تکے بھی آہستہ آہستہ بن رہے تھے اور ساتھ ساتھ کھاے بھی جا رہے تھے، فراز علی نے جو تکہ لکڑیوں کی آگ پر بھونا اس کا مزہ الگ تھا، موسم میں پہاڑوں کی روایتی خنکی تھی اور ہم تکوں سے لطف اندوز ہو رہے تھے ساتھ ہی آگ بھی سینک رہے تھے، تکوں کے بعد اسی چولہے پہ چاے بنائی گئی. کوئلوں کی آنچ پر بنی اس چاے میں کراچی کے پٹھان ہوٹلوں کی چاے سے کہیں زیادہ مزہ تھا. رات دیر گئے تک آگ سینکنے کے ساتھ ساتھ خوش گپیاں ہوتی رہیں. اور ایک بجے کے بعد سب سو پڑے.
صبح بیدار یو کر ناشتے کی تیاری کی اور خیموں کو اکھاڑا کہ آج سڈنی واپسی تھی، ناشتہ میں ابھی تک قیمہ چل رہا تھا، کچھ رات والے تکے بھی تھے. ناشتہ کر کرا کر اور سب سامان سمیٹ کر ہم نے جھیل اڈا منابی کی راہ لی.
جاری ہے

2 comments:

  1. WAHHH TIKKE ! WO BHI DOU ALAG ALAG TARHA SE BANAY HUE ...KIA BAAT HAI ! AUR YE ALLU AUR PANEER KA IDEA BHI KHASA ACHA HAI . YE BLOG TOU RECIPIES SE BHARPOOR HAI SR :) (Y)

    ReplyDelete
  2. Nice Continuation Sir

    ReplyDelete